2

مہنگائی کی شرح 9 اعشاریہ 2 فیصد پرپہنچ گئی

پندرہ اکتوبر کو ختم ہونے والا ہفتے میں مہنگائی کی شرح 9 اعشاریہ دو صفر فیصد کی سطح پر پہنچ گئی۔

وفاقی ادارہ شماریات نے مہنگائی کےہفتہ واراعدادوشمار جاری کردیئےہیں۔گذشتہ ہفتے کے دوران 25 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔مرغی 26 روپے فی کلو،انڈے 9 روپے فی درجن جبکہ ٹماٹر 4 روپے فی کلو مہنگے ہوگئے۔ کراچي ميں ٹماٹر کے دام 200 تک پہنچ گئے۔چینی کی قیمت بھی 2 روپے اضافے کے بعد 100 روپے سے متجاوز کرگئی۔ اسلام آباد اور پشاور ميں چینی 110 روپے فی کلو میں دستیاب تھی۔

اس کے علاوہ آٹے کا 20 کلو والا تھیلا مزید 4 روپے مہنگا ہوگیا۔دال ماش،دال مونگ،کوکنگ آئل،چائے کی پتی،دودھ اورچاول کے نرخ بھی بڑھ گئے۔کیلے،پیاز،آلو سمیت 9 اشیاء کی قیمتوں میں معمولی کمی آئی۔

ادارہ شماریات کے مطابق مہنگائی کی شرح میں صفر اعشاریہ 45 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔ گذشتہ ہفتے مہنگائی کی مجموعی شرح 9 اعشاریہ 20 فیصد کی سطح پر پہنچ گئی۔